Global News Pakistan
GNP is Pakistan’s first ever ‘Multilingual News Agency’ which aims to provide a platform for disseminating news in national, regional & international languages.

سفارتکاروں اور کاروباری برادری کو گلوبل ایمبیسیڈر ایوارڈز سے نوازا

4 1,034

اسلام آباد، 10 دسمبر 2021 (جی این پی): ڈپلومیٹک انساءیٹ گروپ کے زیر اہتمام مختلف سفارت مشن کے ساتھ مستحکم روابط کے فروغ، عوامی میل جول، دو طرفہ تجارت کی بڑھوتری اور دو-طرفہ تعلقات کی مضبوطی کیلئے چوتھے گلوبل ایمبیسڈر ایوارڈ کی تقریب کا انعقاد کیا گیا. یہ پروقار تقریب ہر سال منعقد کی جاتی ہے جس میں سفیروں اور سفارتی نمائندگان، بین الاقوامی تنظیموں کے سربراہان،درآمدات اور بر آ مدات سے منسلک تاجروں اقوام متحدہ کے زیلی اداروں کے سربراہان کو ان کی خدمات کے اعتراف میں گلوبل ایمبیسیڈرز ایوارڈ سے نوازا جاتا ہے
امسال بھی یہ تقریب وفاقی دارالحکومت میں منعقد کی گئی جس میں مختلف ممالک سفراء کرام کے علاوہ اقوام متحدہ کے زیلی اداروں کے سربراہان اور مختلف کاروباری گروپوں کو بھی ایوارڈز دیئے گئے
گلوبل ایمبیسڈر ایوارڈ کا مقصد سیاسی، اقتصادی، ثقافتی، تعلیم، عوام سے عوام کے رابطوں اور ترقیاتی کاموں کو فروغ دینے کے لیے جدوجہد کرنے والی شخصیات کی حوصلہ افزائی کرنا ہے۔ یہ ایوارڈز پاکستان کے بہتر امیج کو آگے بڑھانے اور اس کے برعکس نمایاں کامیابیوں کے لیے نامزد افراد کو تسلیم کرنا ہے. اس خصوصی ایوارڈ کے فاتحین کا انتخاب مختلف پس منظر سے تعلق رکھنے والے ممتاز ماہرین کی ایک کمیٹی کرتی ہے۔وزیر مملکت برائے اطلاعات و نشریات فرخ حبیب اور سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے اطلاعات و نشریات کے چیئرمین فیصل جاوید خان نے تقریب میں بطور مہمان خصوصی شرکت کی اور ایوارڈ تقسیم کیے۔

Diplomatic Insight

اس موقع پر فرخ حبیب نے کہا کہ پاکستان ہمیشہ علاقائی اور عالمی امن کے لیے کام کرتا رہا ہے۔پاکستان کے ساتھ مضبوط دوطرفہ تعلقات استوار کرنے کے لیے غیر ملکی سفارت کاروں کی جانب سے اس طرح کا شاندار کام انتہائی قابل تحسین ہے۔ سینیٹر فیصل جاوید نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ دنیا پاکستان کا حقیقی اور حقیقی چہرہ دیکھے جو پرامن اور ترقی پسند ہو۔اس موقع پر ڈپلومیٹک انسائٹ گروپ کی چیئرپرسن محترمہ فرحت آصف کا کہنا تھا کہ گلوبل ایمبیسڈر ایوارڈ کی تقریب ایک دہائی سے زائد عرصے پر محیط ڈپلومیٹک انسائٹ گروپ کے سفر کی عکاس ہے. انہوں نے غیر ملکی سفارتی مشنوں کے ساتھ قریبی رابطہ کاری کے ذریعے دنیا کے ساتھ پاکستان کے روابط کو فروغ دینے میں گروپ کی کوششوں کو اجاگر کیا۔ انہوں نے ایوارڈ حاصل کرنے والوں کا ان کے شاندار کام، پاکستانی عوام کی جانب سے کارکردگی ایوارڈز کو قبول کرنے پرشکریہ ادا کیا ہے۔ ایوارڈز کے دوران، ڈپلومیٹک انسائٹ گروپ نے ڈپلو ٹی وی کا آغاز کیا۔ ٹی وی کا مقصد دنیا بھر اور پاکستان کے سفیروں، سفارت کاروں اور بین الاقوامی اداروں کے اعلیٰ حکام کے کام پر روشنی ڈالنا ہے تاکہ عوامی سفارت کاری کے اقدامات کے ذریعے مختلف ممالک کے درمیان تعاون کو فروغ دیا جا سکے۔گلوبل ایمبیسیڈر ایوارڈز یورپی یونین کی سفیر اندرولا کمنارا، جمہوریہ عراق کے سفیر حامد عباس لفتا، مراکش کے سفیر محمد کارمونی، نیکولے گویا-رومانیہ کے سفیر خدیجہ محمد المخزومی کو دیا گیا۔ جمہوریہ صومالیہ، مملکت اسپین کے سفیر محمد مطہر الاشابی، جمہوریہ یمن، ڈاکٹر پی جی مہیپالا، (پاکستان میں ڈبلیو ایچ او کے کنٹری ہیڈ) سفیر مسعود خالد، پاکستان کے سابق سفیر میاں محمود الحسن،مختلف قونصلیٹ کے سفیروں اور دیگر کو دیے گئے ۔ مالدووا کے جنرل، ڈاکٹر گو وین لیانگ، ایگریکلچرل کمشنر، عوامی جمہوریہ چین کا سفارت خانہ، کیمپیر بائیفا دلیارا گالیونا، پاکستان میں قازقستان کے سفارت خانے کے تھرڈ سیکرٹری۔ عالمی سفیروں کے علاوہ، کاروباری اداروں کے نمائندوں کو ایوارڈز سے نوازا گیا. چیئرمین چاہنہ اوورسیز پورٹ ہولڈنگ کمپنی کے سی ای او زینگ، ممتاز غیر ملکی بزنس مین اور انسان دوست ڈائریکٹر لون گروپ آ ف کمپنی جناب احمد اکرام لون ، پرائم پیپر پروڈکٹ کے سی ای او یاسر رفیق کے علاوہ تقریب میں بڑی تعداد میں سفیروں، سفارت کاروں اور سول سوسائٹی کے دیگر اہم رہنمائوں اور شخصیات نے شرکت کی۔ گروپ کے زیر اہتمام مختلف سفارت مشن کے ساتھ مستحکم روابط کے فروغ، عوامی میل جول، دو طرفہ تجارت کی بڑھوتری اور دو-طرفہ تعلقات کی مضبوطی کیلئے چوتھے گلوبل ایمبیسڈر ایوارڈ کی تقریب کا انعقاد کیا گیا. یہ پروقار تقریب ہر سال منعقد کی جاتی ہے جس میں
سفیروں اور سفارتی نمائندگان، بین الاقوامی تنظیموں کے سربراہان،درآمدات اور بر آ مدات سے منسلک تاجروں اقوام متحدہ کے زیلی اداروں کے سربراہان کو ان کی خدمات کے اعتراف میں گلوبل ایمبیسیڈرز ایوارڈ سے نوازا جاتا ہے.
امسال بھی یہ تقریب وفاقی دارالحکومت میں منعقد کی گئی جس میں مختلف ممالک سفراء کرام کے علاوہ اقوام متحدہ کے زیلی اداروں کے سربراہان اور مختلف کاروباری گروپوں کو بھی ایوارڈز دیئے گئے
گلوبل ایمبیسڈر ایوارڈ کا مقصد سیاسی، اقتصادی، ثقافتی، تعلیم، عوام سے عوام کے رابطوں اور ترقیاتی کاموں کو فروغ دینے کے لیے جدوجہد کرنے والی شخصیات کی حوصلہ افزائی کرنا ہے۔ یہ ایوارڈز پاکستان کے بہتر امیج کو آگے بڑھانے اور اس کے برعکس نمایاں کامیابیوں کے لیے نامزد افراد کو تسلیم کرنا ہے. اس خصوصی ایوارڈ کے فاتحین کا انتخاب مختلف پس منظر سے تعلق رکھنے والے ممتاز ماہرین کی ایک کمیٹی کرتی ہے۔وزیر مملکت برائے اطلاعات و نشریات فرخ حبیب اور سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے اطلاعات و نشریات کے چیئرمین فیصل جاوید خان نے تقریب میں بطور مہمان خصوصی شرکت کی اور ایوارڈ تقسیم کیے۔ اس موقع پر فرخ حبیب نے کہا کہ پاکستان ہمیشہ علاقائی اور عالمی امن کے لیے کام کرتا رہا ہے۔پاکستان کے ساتھ مضبوط دوطرفہ تعلقات استوار کرنے کے لیے غیر ملکی سفارت کاروں کی جانب سے اس طرح کا شاندار کام انتہائی قابل تحسین ہے۔ سینیٹر فیصل جاوید نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ دنیا پاکستان کا حقیقی اور حقیقی چہرہ دیکھے جو پرامن اور ترقی پسند ہو۔اس موقع پر ڈپلومیٹک انسائٹ گروپ کی چیئرپرسن محترمہ فرحت آصف کا کہنا تھا کہ گلوبل ایمبیسڈر ایوارڈ کی تقریب ایک دہائی سے زائد عرصے پر محیط ڈپلومیٹک انسائٹ گروپ کے سفر کی عکاس ہے. انہوں نے غیر ملکی سفارتی مشنوں کے ساتھ قریبی رابطہ کاری کے ذریعے دنیا کے ساتھ پاکستان کے روابط کو فروغ دینے میں گروپ کی کوششوں کو اجاگر کیا۔ انہوں نے ایوارڈ حاصل کرنے والوں کا ان کے شاندار کام، پاکستانی عوام کی جانب سے کارکردگی ایوارڈز کو قبول کرنے پرشکریہ ادا کیا ہے۔ ایوارڈز کے دوران، ڈپلومیٹک انسائٹ گروپ نے ڈپلو ٹی وی کا آغاز کیا۔ ٹی وی کا مقصد دنیا بھر اور پاکستان کے سفیروں، سفارت کاروں اور بین الاقوامی اداروں کے اعلیٰ حکام کے کام پر روشنی ڈالنا ہے تاکہ عوامی سفارت کاری کے اقدامات کے ذریعے مختلف ممالک کے درمیان تعاون کو فروغ دیا جا سکے۔گلوبل ایمبیسیڈر ایوارڈز یورپی یونین کی سفیر اندرولا کمنارا، جمہوریہ عراق کے سفیر حامد عباس لفتا، مراکش کے سفیر محمد کارمونی، نیکولے گویا-رومانیہ کے سفیر خدیجہ محمد المخزومی کو دیا گیا۔ جمہوریہ صومالیہ، مملکت اسپین کے سفیر محمد مطہر الاشابی، جمہوریہ یمن، ڈاکٹر پی جی مہیپالا، (پاکستان میں ڈبلیو ایچ او کے کنٹری ہیڈ) سفیر مسعود خالد، پاکستان کے سابق سفیر میاں محمود الحسن،مختلف قونصلیٹ کے سفیروں اور دیگر کو دیے گئے ۔ مالدووا کے جنرل، ڈاکٹر گو وین لیانگ، ایگریکلچرل کمشنر، عوامی جمہوریہ چین کا سفارت خانہ، کیمپیر بائیفا دلیارا گالیونا، پاکستان میں قازقستان کے سفارت خانے کے تھرڈ سیکرٹری۔ عالمی سفیروں کے علاوہ، کاروباری اداروں کے نمائندوں کو ایوارڈز سے نوازا گیا. چیئرمین چاہنہ اوورسیز پورٹ ہولڈنگ کمپنی کے سی ای او زینگ، ممتاز غیر ملکی بزنس مین اور انسان دوست ڈائریکٹر لون گروپ آ ف کمپنی جناب احمد اکرام لون ، پرائم پیپر پروڈکٹ کے سی ای او یاسر رفیق کے علاوہ تقریب میں بڑی تعداد میں سفیروں، سفارت کاروں اور سول سوسائٹی کے دیگر اہم رہنمائوں اور شخصیات نے شرکت کی۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

4 Comments
  1. Free trading here says

    If some one needs to be updated with newest technologies afterward he must be pay a quick
    visit this website and be up to date every day.

    Here is my blog: Free trading here

  2. About Us says

    Wow, this piece of writing is nice, my younger sister is analyzing such things,
    so I am going to let know her.

    Here is my site: About Us

  3. page not found says

    Marvelous, what a blog it is! This weblog provides valuable
    information to us, keep it up.

  4. Everything is very open with a very clear clarufication of the issues.
    It was treuly informative. Your website iss very useful. Thanks for sharing!

    Here is my web site … https://www.kirnsecuredoors.com

Leave A Reply

Your email address will not be published.